مرزا غالب کے اردو خطوط نے اردو نثر میں سادگی و سلاست کے ساتھ ساتھ سنجیدہ ظرافت اور طنز کی داغ بیل بھی ڈالی۔ غالب اردو کے بہترین جذبات نگار انشا پرداز تھے۔ ان کے بعد مولانا ابوالکلام آزاد کے مکاتیب، مرزا غالب کے خطوط سے مماثلت رکھتے ہیں، مگر ان دونوں احباب کی تربیت، […]

مزید پڑھیں

مہاراجہ سرکشن پرشاد فارسی، سنسکرت، عربی، اردو، منطق، خطاطی، فنون سپہ گری، رمل، نجوم، مصوری اور موسیقی میں کامل دست گاہ رکھتے تھے۔ ان کے اقبال سے قریبی تعلقات تھے جس کا اندازہ شاد اور اقبال کی مراسلت نگاری سے بھی کیا جا سکتا ہے۔ یہ مراسلت اس اعتبار سے بھی اہمیت کی حامل ہے […]

مزید پڑھیں

مکتوب نگاری کی روایت کافی قدیم زمانے سے ہے۔کاغذ کی ایجاد سے قبل بھی مکتوب نگاری کے آثار ملتے ہیں۔لوگ پتھر، تانبے، موم اور لکڑی پر اپنا پیغام لکھ کر بھیجتے تھے۔غلام حیدر کے خیال میں اس قسم کے خطوط کی ابتداء حضرت عیسیٰ علیہ السلام کی پیدائش سے بھی کوئی ڈھائی ہزار سال پہلے […]

مزید پڑھیں

خیبر پختون خوا کے قلمکاروں میں ڈاکٹر ظہور احمد اعوان ایک ہمہ جہت شخصیت رکھتے ہیں۔ کالم نگاری کے سفر میں ان کے نام مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے افراد کے بے شمار خطوط آئے۔ جن میں سے پندرہ ہزار کے لگ بھگ انھوں نے محفوظ کر لیے۔ انھی خطوط میں سے پانچ سو […]

مزید پڑھیں

اُردو میں مکتوب نگاری کی روایت اب خاصی مستحکم ہو چکی ہے۔ اس مقالے میں محقق نے اردو کے دو اہم محققین یعنی مالک رام اور ڈاکٹر وحید قریشی کے مابین مختلف موضوعات پر بذریعہ مراسلہ ہونے والے مکالمے کا احاطہ کیا ہے۔

مزید پڑھیں