‘‘دیوار کے پیچھے’’انیس ناگی کا ایسا ناول ہے جو اُن کے روشن خیال اور باشعور تخلیق کار ہونے کا عملی نمونہ ہے۔ اس ناول کا موضوع پاکستان میں آمریت کے سائے میں پلتی ہوئی سیاسی صورتِ حال ہے۔یہ مقالہ انیس ناگی کے متذکرہ ناول کا تجزیاتی مطالعہ پیش کرتا ہے۔ مقالہ نگار کے مطابق ‘‘دیوار […]

مزید پڑھیں

اس مقالے میں دو اردو ناولوں خوشیوں کا باغ اور دیوار کے پیچھے کا پاکستانی جدید ادب کے حوالے سے تجزیہ کیا گیا ہے۔ مقالہ نگار کے مطابق جدید ادب کے تحت لکھے جانے والے ان ناولوں کے مطالعے سے معلوم ہوتا ہے کہ ناول ہمیشہ معاشرتی اور سماجی حالات سے متاثر ہو کر ہی […]

مزید پڑھیں

۱۹۱۴ء میں فرانسیسی شاعری میں ڈاڈا ازم کا نظریہ اور تحریک وجود میں آئی جو انفرادی خود نمائی اور خود پسندی کے جذبے سے پیدا ہوئی تھی۔ چوں کہ یہ ہر چیز سے بغاوت کی حامل تھی اس لیے بہت سے فرانسیسی شعرا نے اس سے الگ ہو کر سرریلزم کا آغاز کیا جس نے […]

مزید پڑھیں

انیس ناگی نے ایک درجن سے زائد ناول لکھے۔ ان کے بیشتر ناول البیر کامیو، سارتر، آندرے ژید اور فرانزکافکا کے زیرِ اثر بحران میں پنپنے والی وجودی صورتِ حال کے عکاس ہیں۔ انیس ناگی نے محض واقعات کی ناول نگاری نہیں کی۔ ان کے ناولوں کی دنیا ہم عصریت کی بوباس سے پُرعہد جدید […]

مزید پڑھیں

میراجی—ایک بھٹکا ہوا شاعر انیس ناگی کی تنقیدی کاوش ہے، جس میں انیس ناگی نے میرا جی کی شاعری کے حوالے سے اس کی شخصیت تک رسائی حاصل کرنے کی کوشش کی ہے۔ انھوں نے میرا جی کے ادبی کارناموں کو احاطۂ تحریر میں لاتے ہوئے اردو میں ان کا مقام و مرتبہ متعین کرنے […]

مزید پڑھیں