اس مقالے میں اردو افسانے کے آغاز سے لے کر جدید افسانہ نگاروں تک مختلف افسانہ نگاروں کے ہاں عورت کے تصور کی وضاحت کی گئی ہے۔ ابتدا میں علامہ راشد الخیری کے اپنے افسانوں میں عورت کے وہ رُخ دکھائے جن کی اس زمانے میں عورت کو ضرورت تھی۔ پریم چند نے عورت کو […]

مزید پڑھیں

دیگر اصنافِ ادب کی طرح اردو افسانہ نے بھی ارتقائی دور سے گزرتے ہوئے ترقی کی بہت سی منازل طے کیں۔ بیسویں صدی کے ابتدائی عشروں میں اردو افسانے میں فنی، موضوعی، معنوی لحاظ سے کئی تبدیلیاں رونما ہوئیں۔ سماجی اور تہذیبی تبدیلیاں براہِ راست افسانے پر اثر انداز ہوئیں۔ رومانوی دور کے افسانوں میں […]

مزید پڑھیں

بلوچستان میں لکھا گیا  افسانہ  مقامی زمین  سے انسلاک کا رشتہ رکھتا ہے۔ مقامی مسائل کو بلوچی افسانے میں بڑے مضبوط اور جدید انداز میں پیش کیا گیا ہے۔

مزید پڑھیں

یہ مقالہ ترجمہ نگاری کی اس اوّلین روایت کو سامنے لاتا ہے کہ جو نفسیاتی افسانوں سے عبارت ہے۔مغرب کے افسانوی ادب بالخصوص افسانے میں نفسیاتی انکشافات کا اثر و رسوخ فرائیڈ کے نفسیاتی مباحث کے بعد شروع ہوا۔ بیسویں صدی کے آغاز میں اُردو میں چند ایسے مترجمین موجود تھے جنھوں نے مغرب کے […]

مزید پڑھیں

اُردو ادب کے حوالے سے مستنصرحسین تارڑ کسی تعارف کے محتاج نہیں۔ مستنصر حسین تارڑ کا پہلا افسانوی مجموعہ ‘‘سیاہ آنکھ میں تصویر’’ تھا۔ اس کے بعد طویل عرصے تک ناول، سفرنامے اور کالم ان کی توجہ کا مرکز رہے۔ ۲۰۱۵ءمیں ان کا دوسرا افسانوی مجموعہ ‘‘۱۵کہانیاں’’ اشاعت پذیر ہوا جس میں ان کے اندر […]

مزید پڑھیں